پاکستانی

مہاراجہ رنجیت سنگھ کی برسی پرسکھ یاتری اس سال پاکستان آئینگے

لاہور:سکھ مذہب کے روحانی پیشواء مہاراجہ رنجیت سنگھ کی برسی کی تقریبات میں شرکت کے لیے بھارت سے سکھ یاتری خصوصی ٹرین کے ذریعے 28جو ن کو پاکستان پہنچیں گے جہاں پر متروکہ وقف املاک بورڈ کے چیئرمین محمد صدیق الفاروق ،ایڈیشنل سیکرٹری شرائنز محمد طارق خان اور دیگر اعلیٰ افسر انکا استقبال کریں گے۔علاوہ ازیں دنیا کے دیگر ممالک سے بھی سکھ یاتری ان تقریبات میں شرکت کے لئے پاکستان آئیں گے۔ متروکہ وقف املاک بورڈ نے مہمانوں کی رہائش ،سکیورٹی اور سفری سہولیات سمیت دیگر تما م ضروری انتظامات مکمل کر لیے ہیں۔شیڈول کے مطابق سکھ یاتری28جون کو واہگہ بارڈرسے کلیئرنس کے بعد گردوارہ ڈیرہ صاحب لاہور میں قیام کریں گے جہاں پر 29جون کو مہاراجہ رنجیت سنگھ کی برسی کی مرکزی تقریب منعقد ہو گی ۔30جون کو گرودوارہ روہڑی صاحب ایمن آباد اور گرودوارہ دربار صاحب کرتار پور یاترا کے بعد واپس لاہور آئیں گے ۔یاتری 2جولائی کواسپیشل ٹرین کے ذریعے لاہور سے گردوارہ پنجہ صاحب حسن ابدال جائیں گے ۔4جولائی کو حسن ابدال سے جنم استھان ننکانہ صاحب آئیں گے۔ یہاں ایک دن قیام کے بعد گورودوارہ سچا سودا فاروق آباد روانہ ہو جائیں گے جہاں یاتراکر نے کے بعد ننکانہ صاحب واپس آئیں گے ۔بھارت سے آئے سکھ یاتری 7جولائی کو ننکانہ سے اسپیشل ٹرین کے ذریعے بذریعہ واہگہ بارڈر واپس چلے جائیں گے۔

Related Articles

Back to top button
شیئر کریں