‏مسیحی خبریں

فاروق آباد: مسیحی لڑکی سے اغوا کے بعد زیادتی؛پولیس خاموش

تھانہ صدر فاروق آباد کے علاقہ اجنیانوالہ میں ایک بگڑے ہوئے اوباش نوجوان نے مسیحی محنت کش کی ہمشیرہ کو زبردستی اغوا کرنے کے بعد اپنے ڈیرہ پر لیجاکر زیادتی کا نشانہ بناڈالا لڑکی ملزمان کے چنگل سے چیختی چلاتی ہوئی گھر پہنچ گئی پولیس نے کئی روز بعد مقدمہ تو درج کرلیا مگر اب کئی روز گزرنے کے بعد ملزمان کو گرفتار نہیں کررہی بلکہ الٹا ملزم علی نے اپنے بھائیوں کے ہمراہ صلح کیلئے دبائو ڈالنے کی خاطر ان کے گھر کے باہر آکرہوائی فائرنگ کے ساتھ سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دے رہا ہے جس پر محنت کش اپنے ہمشیرہ کے ہمراہ پریس کلب پہنچ گیا جہاں اس نے مطالبہ کیا کہ وزیراعلیٰ پنجاب اس زیادتی کے واقع کا نوٹس لیکر ملزم کی گرفتار ہمیں انصاف کی فراہمی اور تحفظ کیلئے احکامات جاری کریں ۔

Source
Nawa-E-Waqt

مزید خبریں

شیئر کریں
Close