پاکستانی‏مسیحی خبریں

اقلیتوں نے سندھ بھر میں شراب کی دکانیں بند کرانے کا مقدمہ جیت لیا

پاکستان بشپ کونسل نے ایک سوشل میڈیا پر اپنے بیان میں یہ واضع کیا ہے کہ عدالت میں شراب کی دکانیں بند کروانے کا مقدمہ جیت لیا گیا ہے۔ یہ کیس عدالت میں پاکستان بشپ کونسل ، مقامی ہندو راہنماؤں اوردیگر اقلیتی برادری سے تعلق رکھنے والے افراد نے درج کروایا تھا۔
 کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس آف سندھ نے ہدایات جاری کیں ہیں کہ سندھ بھر میں شراب کی دکانیں فوری طور پر بند کردیں جائیں۔
پاکستان بشپ کونسل نے بیان دیا ہے کہ چیف جسٹس آف سندھ جسٹس سید علی شاہ کو شراب کے استعمال کے حوالے سے بائبل کی تعلیمات سے آگاہ کیا گیا،اسی حوالے سے دوسرے مذاہب کے شرکین نے بھی شراب سے متعلق اپنی مذہبی تعلیمات بتائیں جسے سننے کے بعد صوبہ سندھ میں شراب کی دکانیں بند کروانے کی ہدایات جاری کردیں گئیں۔
کیس کی سماعت کے بعد پاکستان بشپ کونسل اور دوسری شامل اقلیتوں کے ممبران جن میں بشپ خادم بھٹو، سردار ہیرا سنگھ خالصہ، سلیم مائیکل، ندیم شیخ، عاطم پراکاش چینانی شامل تھے انہوں نے میڈیا کو کیس کی سماعت سے متعلق بتایا۔

Related Articles

Back to top button
شیئر کریں