پاکستانی‏مسیحی خبریں

تم پنجابی ہو،بلوچستان چھوڑ دو،پنجاب کا رہائشی مسیحی بلوچ انتہا پسندوں کے ہاتھوں قتل

قصور(نوائے مسیحی) کا رہائشی پرویز مسیح بلوچستان میں روزی کمانے کیلئے حجام کی دکان چلاتا تھا،اسے بلوچستان نہ چھوڑنے کی بنا پر گولیاں مارکر شہید کردیا گیا۔

 تفصیلات کے مطابق چونیاں ضلع قصور کا رہائشی پرویز مسیح محنت کی غرض سے تربت بلوچستان گیا تھا وہاں اس نے حجام کی دکان بنائی تھی۔ ایک ہفتہ قبل انتہاپسندوں نے پرویز مسیح سے کہا کہ تم پنجابی ہو اور بلوچستان ہمارا ہے اس لئے تم اسے چھوڑ دو اور چلے جاؤ مگر پرویز نے کہا کہ میں بلوچستان نہیں چھوڑوں گا چاہے مجھے جان سے مار ڈالو۔ اس کے بعد بلوچ انتہا پسندوں نے پرویز مسیح کی دکان پر فائرنگ شروع کردی جسکے نتیجے میں پرویز مسیح سمیت دو اور لوگ شہید ہوگئے۔ 

پرویز ایک سچا حب الوطن پاکستانی تھا،پرویز مسیح کو اسکے آبائی علاقے چونیاں کے قبرستان میں 8 جولائی کو سپردِ خاک کیا گیا۔ پرویز کے سوگوار خاندان نے بیٹے کے چونکا دینے والی حب الوطنی پر فخر کا اظہار کیا ہے۔ اسکی بہادری اور جرأت کو تسلیم کرتے ہوئے تمام مسیحی حلقوں ،دوستوں، عزیزو ں نے پرویز کے جذبے کو سراہا ہے اور کہا کہ اسکی قربانی ہمیشہ یاد رکھی جائے گی۔

Related Articles

Back to top button
شیئر کریں