پاکستانی‏مسیحی خبریں

قصور: مسیحی خاتون کے ساتھ زیادتی کرنے کی کوشش

Read in English A Muslim man attempt to rape poor Christian mother of three.

قصور ( پی سی پی ) میں ایک مسلمان شخص جس کانام محمد سادو علی ہے , بے باقی سے ایک مسیحی خاندان کے گھر میں داخل ہو ا اورظہرہ بی بی نامی مسیحی خاتو ن کے ساتھ جنسی زیادتی کرنے کی کوشش کی ۔ یہ واقع 13اپریل 2016کو جلے کی نامی گاؤں کے ایک بھٹے پر ہوا ۔رات 9بجے کے قریب جب ظہرہ بی بی نہا رہی تھی تب محمد سادو علی اس کے گھر میں داخل ہوا اور زیادتی کرنے کی کوشش کی جس پر خاتون نے مزاحمت کرتے ہوئے شور مچانہ شروع کر دیا اور زاروقطار رونے لگی ۔آواز سن کر آس پاس کے ہمسائے آگئے اور محمد سادو علی کے اس گندے منصوبے کو ناکام بنا دیا ۔
شیدا مسیح جو کہ اس واقع کی شکار ہونیوالی خاتون کا شوہر ہے اس نے مقامی تھانے میں مجرم کے خلاف شکایت درج کروائی کہ مجرم کے خلاف کاروائی کی جائے لیکن پولیس حکام نے اس پر دباؤ ڈالا اور دھمکایا کہ وہ اپنی درج کروائی شکایت واپس لے لیں اور اس کیس میں کوئی کاروائی نہ کروائیں مجرموں کیخلاف ۔
جب شیدا مسیح نے اپنی بیوی کے ساتھ مدد کیلئے انسانی حقوق کے ادارے سے رابطہ کیا تو انسانی حقو ق کے ادارے کے نمائیندے سردار مشتاق گِل نے انہیں مکمل سپورٹ اور مدد کرنے کی یقین دہانی کروائی ہے تاکہ متاثرہ خاندان کو انصاف مل سکے۔ 
متاثرہ خاندان نے مقامی مسیحی رہائشیوں کے ساتھ مل کر اس واقع کے خلاف علاقہ میں احتجاج بھی کیا اور مطالبہ کیا کہ اس واقع میں ملوث مجرموں کو فوری گرفتار کیا جائے ۔متاثرہ خاتون ظہرہ بی بی کے شوہر شیدا مسیح نے انسانی حقوق کے نمائندے سردار مشتاق گِل سے کہا کہ اگر انہیں انصاف نہ ملا تو وہ خود کشی کر لے گا ۔اس نے مزید بتایا کہ وہ اب بھٹے پر کام نہیں کر رہا اور اس کے بچے 3دن سے بھوکے ہیں ۔
شیدا مسیح نے خاندان کے تحفظ اور انصاف کیلئے چرچ میں دعا کی درخواست بھی دی ۔

مزید خبریں

شیئر کریں
Close