مصرکے چرچ میں نصب بم کوناکارہ بناتے ہوئے اہلکارجاں بحق

مصر میں قطبی اورتھوڈوکس چرچ میں نصب بم کو ناکارہ بناتے ہوئے دھماکا ہوگیا جس کے نتیجے میں ایک اہلکار جاں بحق اوردو زخمی ہوگئے۔تفصیلات کے مطابق چرچ کے چھت پر نصب بارودی سرنگوں کو ناکارہ بنانے کے ماہربم ڈسپوزل محکمہ کے اہلکار مصطفیٰ عابد قاہرہ کے نواح میں واقع شہرنصر کے قطبی چرچ میں چھپائے گئے بم کو ناکارہ بناتے ہوئے جاں بحق ہوگئے جب کہ دو اہلکار شدید زخمی ہیں۔زخمی پولیس اہلکاروں کو قریبی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں ایک زخمی کی حالت نازک بتائی جارہی ہے۔مصر کے صدر عبدالفتح السیسی نے جاں بحق افسر کے لواحقین سے تعزیت کا اظہار کیا ہے اوراسپتال میں زخمی اہلکاروں کی عیادت کی ہے۔پولیس حکام کا کہنا ہے کہ بم کو ایک تھیلے میں بند کرکے چرچ کی چھت پر رکھا گیا تھا۔بم کی موجودگی کی اطلاع پرخصوصی ٹیم کوطلب کیا گیا تھا۔ کسی شدت پسند جماعت نے بم نصب کرنے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔یہ واقعہ اس وقت پیش آیا ہے جب عید ظہور منائی جارہی اور قطبی مسیحی کرسمس منانے کی تیاریاں کررہے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں