پاکستانی‏مسیحی خبریں

پاکستان میں 2009 سے 2015 کے عرصے میں مسیحیوں سمیت دیگر اقلیتوں پر ہونے والے حملے

یکم اگست 2009: گوجرہ میں مشتعل مظاہرین نے قرآن پاک کی بے حرمتی پر مسیحی آبادیوں پر حملے کئے جن میں قریب 9 افراد جابحق اور درجن سے زائد زخمی ہوئے۔

مئی 2010: لاہور میں احمدی برادری کی 2 عبادتگاہوں میں جمعہ کے اجتماعات دہشتگردی کا نشانہ بنے جس میں قریب 90احمدی جابحق اورکئی زخمی ہوئے 
9مارچ2013: لاہور میں مسیحیوں کے گھروں کو ایک مشتعل گروہ نے جلا دیا،اس الزام کی بنیاد پر کہ ایک مسیحی توہینِ مذہب کا مرتکب ہوا۔
27جولائی 2014: گوجرآنوالہ میں ہجوم نے احمدیہ کمیونٹی کے 5 گھروں پر توہینِ مذہب کے الزام پر حملہ کیا جسکے نتیجے میں ایک 8 ماہ کی بچی ،ایک دس سال کی بچی سمیت تین خواتین جابحق ہوئیں۔
15مارچ 2015: لاہور کے علاقے یوحناآباد میں چرچ کے گیٹ پر دو خودکش دھماکے ہوئے جسکے نتیجے میں 15 افراد جابحق اور درجنوں زخمی ہوئے۔

Related Articles

Back to top button